Vertical Grid Post

افسانہ

خوشی بادشاہ — افراح فیاض

مبارک پور کی جنازہ گاہ میں بچوں کا بہت رش تھا۔ ظاہرہے کوئی فوت ہوا تھا۔ مگر فوت ہونے والا کون تھا۔۔۔ ؟ جنازہ گاہ میں بچوں کی موجودگی ایک انہونی بات تھی۔ ایک راہ

Loading

Read More »
افسانہ

عادت — ثمینہ سیّد

’’یہ میرا وقت ہے۔ مَیں جیسے بھی گزاروں‘‘ زہیر نے مسکرا کر کہا تو وہ اسے دیکھتی رہ گئی۔ ’’بتائو ضرورت یا عادت؟‘‘ زہیر نے اپنا سوال دہرایا۔ ’’ضرورت بہت بڑی حقیقت ہے۔ معاشی ضرورت،

Loading

Read More »
افسانہ

دل تو بچہ ہے جی — کنیز نور علی

شنو تو شائد واقعی تارہ سے جان چھڑانا چاہتی تھی سو جو منہ میں آتا بول دیتی….. شنو کا ایسے ہی جلدی جلدی لوگوں سے دل بھر جایا کرتا تھا…. اور کچھ یہ بھی تھا

Loading

Read More »
افسانہ

سائبان — محمد عمر حبیب

’’صاحب میں نے ایسا کچھ نہیں کیا۔ میں گاڑی لے کر گزر رہا تھا کہ دیکھا ایک ریڑھی سڑک پر آئی ہوئی ہے۔ میں اتر کے آیا اور پیار سے اسے سمجھایا کہ ریڑھی پیچھے

Loading

Read More »
افسانچہ

خسارہ — تشمیم قریشی

کاروبار بُری طرح خسارے میں جارہا تھا اور بینک سے لئے جانے والا قرضہ ادا کرنے کی مدت ختم ہونے والی تھی جب کہ دوسری طرف سرمایہ لگانے والوں کی ایک بڑی تعداد اس کی

Loading

Read More »
افسانہ

موبائل یاریاں — عرشیہ ہاشمی

’’دیکھو صغریٰ بہن… آج کل زمانہ بہت نازک چل رہا ہے اور آج کل کی اولاد بے حد چالاک اور تیز ہے۔‘‘ ’’صحیح کہہ رہی ہو رانی… زمانہ بڑا نازک ہو گیا ہے۔‘‘ ایک ٹھنڈی

Loading

Read More »
افسانہ

لاپتا — سندس جبین

جب سے ہادیہ سات سال کی ہوئی وہ اُس کے بارے میں بہت زیادہ محتاط ہو گئی تھی۔ ہر وقت دھیان رکھتی کہ وہ کہاں آجا رہی ہے۔ وہ کوئی چیز یا سودا سلف وغیرہ

Loading

Read More »
الف کتاب

کرم جلی — فرح بھٹّو

’’آپ کو اپنی بیوی کی جان لینی ہے کیا؟‘‘ لیڈی ڈاکٹر نے رضیہ کا مکمل چیک اپ کرنے کے بعد مبشر کو اندر کمرے میں بلایا۔ اور عینک کی اوٹ سے مبشر کو کڑی نظروں

Loading

Read More »
error: Content is protected !!