جنگل میں دعوت

جنگل میں دعوت

ارسلان اللہ خان

 

مسٹر بھالو نے کی یہ وِش

رکھّیں جنگل میں ہم وَن ڈِش

 

جوں ہی آیا طوطا قاضی

ہوگیا سارا جنگل راضی

 

دال کا دانہ چڑیا لائی

بلّی حلوا لے کر آئی

 

بندر آیا ناچتا گاتا

لیکن گینڈا ہے شرماتا

 

سارس کو یوں ہوئی ہے دیر

لایا ہے وہ ڈھیروں بیر

 

اچھی طرح سے کرکے بیک 

ہرنی لائی ہے اک کیک

 

شیر بھی آیا ، لومڑ بھی

ساتھ ہیں بِلّا ، گیدڑ بھی

 

لو جی بی بطّخ بھی آئیں

چونچ میں اپنی بسکٹ لائیں

 

کود کہ آیا ہے لنگور

ہاتھ میں اُس کے ہے انگور

 

میگی لایا ہے خرگوش

کچھوا دیکھ کے ہے مدہوش

 

آکر بولے مسٹر بھالو 

دیکھو ہم لائے ہیں آلو

 

آلو کے تُم چپس بنائو 

سب کو فنگر چپس کھلائو

 

مزے مزے کے کھانے آئے

جو سب نے مِل جُل کر کھائے

 

خود پر قابو نہ رکھ پائے

مسٹر بھالو ناچے گائے

 

سب نے دی پھر اُن کو داد 

یہ تھی وَن ڈِش کی رُوداد

٭…٭…٭

 

admin

Read Previous

بہترین کھانا – نیکی سیریز

Read Next

موسم ۔ نظیر فاطمہ

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Content is protected !!